English اُردو        
  رابطہ اغراض و مقاصد تعارف سرورق

مورخہ: ۲۸ اکتوبر ۲۰۱۱ء

پریس ریلیز

گذشتہ روز حال ہی میں پاکستان سے سبکدوش ہونے والی ایرانی سفیر محترم مشا اللہ شاکری نے اپنے وفد کے ہمراہ مقتدرہ قومی زبان کا دورہ کیا اور صدر نشین مقتدرہ ڈاکٹر انوار احمد سے الوداعی ملاقات کی ۔ ایرانی سفیر نے اپنے اعزاز میں دی گئی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ جو قومیں اپنی مادری زبان میں تعلیم اور سرکاری امور سرانجام دیتی ہیں وہ قومیں دنیا میں سربلند ہیں اور اقبال نے اُمت مسلمہ کی بیداری کا جو خواب دیکھا تھا وہ دنیا کے مختلف حصوں میں تبدیلیاں لارہاہے یا تبدیلیوں کا موجب بن رہا ہے ۔ اور خود انقلاب ایران کا سرچشمہ فکر اقبال ہے اس موقع پر انھوں نے اقبال کے دو نظموں شمع و شاعر اور طلوع سحر سے اشعار بھی پڑھ کر حاضرین کو سنائے ۔ مقتدرہ کے صدر نشین ڈاکٹر انوار احمد نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہ ہمیں باہمی ارتباطِ علمی کو بڑھانا چاہیئے اور فارسی زبان و ادب کو فروغ دینا چاہیئے ۔ تقریب میں مقتدرہ کے سابق صدر نشین افتخار عارف ، احسان اکبر ، جلیل عالی ، بشیر حسین ، ناظم اور دیگر دانشوروں اور ادیبوں نے بھی شرکت فرمائی ۔ 

جاوید اختر 
مشیر ابلاغ عامہ

 
 
جملہ حقوق بحق ادارۂ فروغِ قومی زبان محفوظ ہیں