English اُردو        
  رابطہ اغراض و مقاصد تعارف سرورق

مورخہ: 26 جولائی 2011

پریس ریلیز

گزشتہ روز وزیراعظم سے مکالمے کے بعد کچھ نامور دانشوروں نے مقتدرہ قومی زبان کا دورہ کیا جن میں ڈاکٹر محمد علی صدیقی، ڈاکٹر اصغر ندیم سیّد اور ڈاکٹر روبینہ ترین شامل ہیں۔ ان شخصیات نے مقتدرہ کے سبزہ زار میں یادگاری درخت لگائے۔ بعد ازاں مقتدرہ کے سکالروں سے گفت و شنید بھی کی۔ اس موقع پر ڈاکٹر محمد علی صدیقی نے کہا کہ وہ ادارے میں پائے جانےوالے رجحانات کو بہت سراہتے ہیں اور اس کے لیے وہ اپنی ہر طرح کی خدمات پیش کرتے ہیں۔ انھوں نے اخبار اردو کے لیے اشتہارات حاصل کرنے اور خریداری مہم کو تیز کرنے کے لیے تعاون کی یقین دہانی کے ساتھ تجاویز بھی دیں۔ ڈاکٹر اصغر ندیم سیّد نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ زبانیں اپنا راستہ خود بناتی ہیں جس کی واضح مثال اردو زبان ہے جو ہمیں ہندوستانی فلموں اور ڈراموں میں کثرت سے نظر آرہی ہیں۔ انھوں نےمقتدرہ کی معاشی اعانت کے لیے اہم سرکردہ شخصیات سے رابطے کا وعدہ بھی کیا۔ اس موقع پر ڈاکٹر محمد علی صدیقی اور ڈاکٹر اصغر ندیم سیّد اخبار اردو کے سالانہ خریدار بھی بنے۔ مقتدرہ کے صدر نشین ڈاکٹر انوار احمد نے مہمانان گرامی کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ ہم چاہتے ہیں کہ یہ ادارہ ایک تحریک بنے جس میں صاحبان علم اپنا کردار ادا کریں اور سب مل جل کر اردو کی ترویج کے لیے کام کریں۔

 
 
جملہ حقوق بحق ادارۂ فروغِ قومی زبان محفوظ ہیں