English اُردو        
  رابطہ اغراض و مقاصد تعارف سرورق

مورخہ: ۱۹ اکتوبر ۲۰۱۱ء

پریس ریلیز

اسلام آباد(پ ر) ایرانی سفارت خانہ کے کلچرل قونصلر آقائے نوری نے پاکستان میں نئے تعینات ہونے والے قائم مقام ایرانی کلچرل قونصلر اور مرکز تحقیقات فارسی پاکستان کے ڈائریکٹرجناب قھرمان سلیمانی کا تعارف صدرنشین مقتدرہ اور دیگر افسران سے کروایا اور مقتدرہ قومی زبان کا دورہ کیا۔ آقائے نوری پاکستان میں اپنے قیام کی مدت مکمل ہونے کے بعد پاکستان سے جا رہے ہیں۔ ڈاکٹر انوار احمد نے آقائے نوری ، نئے کلچرل قونصلر اور ان کے وفد کو مقتدرہ میں خوش آمدید کہتے ہوئے کہا کہ ایران اور پاکستان کے ثقافتی تعلقات بہت پرانے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ فارسی اور اردو ایک دوسرے کے لیے تقویت کا باعث ہیں اور فارسی زبان میں سائنسی علوم میں جو کام ہو رہاہے اس سے مقتدرہ استفادہ کر نا چاہتا ہے۔ نئے ایرانی کلچرل قونصلر نے مقتدرہ کی سرگرمیوں کو سراہتے ہوئے کہا کہ زبان کی ایک علمی صورت ہوتی ہے اور دوسری ظاہری۔ ظاہری صورت اس زبان کے رسم الخط سے عیاں ہوتی ہے۔ فارسی میں خوش نویسی ایک باقاعدہ علم کے طور پر موجود ہے اور ایران میں انجمن خوش نویسیان بہت متحرک ہے۔ انھوں نے پیش کش کی کہ مقتدرہ ایران کے خوش نویسوں سے خطاطی کے ضمن میں استفادہ کر سکتا ہے۔

(جاوید اختر)
مشیر ابلاغ عامہ

 
 
جملہ حقوق بحق ادارۂ فروغِ قومی زبان محفوظ ہیں